تازہ ترین

Posts Tagged “مصطفیٰ کمال”

پاک سرزمین پارٹی کی مرکزی قیادت کے خلاف مقدمہ درج

کراچی: پاک سرزمین پارٹی کے مصطفیٰ کمال، انیس قائم خانی سمیت مرکزی قیادت کے خلاف مقدمہ درج کر لیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق دو روز قبل پاک سرزمین پارٹی نے شہر کے مسائل کو حل نہ ہونے پر سندھ حکومت کے خلاف ملین مارچ کا انعقاد کیا تھا، ایف ٹی سی کے قریب  شاہراہ فیصل کا دوسرا ٹریک بند کرنے پر پولیس نے پی ایس پی کارکنان پر لاٹھی چارج کیا اور شیلنگ کی۔

وزیراعلیٰ ہاؤس جانے کی ضد مصطفیٰ کمال کو مہنگی پڑی، پولیس افسران سے مذاکرات میں ناکامی کے بعد پولیس نے پی ایس پی کے خلاف کریک ڈاؤن کیا تو سربراہ ، مرکزی قیادت اور کارکنان کو گرفتار کیا اور لیاری کے تھانے منتقل کیا تاہم دو گھنٹے بعد تمام افراد کو رہا کردیا گیا۔

آج ایس ایچ او صدر کی مدعیت میں پی ایس پی رہنماؤں کے خلاف صدر تھانے میں مقدمہ درج کروادیا گیا جس میں مصطفیٰ کمال، انیس قائم خانی، رضا ہارون، ڈاکٹر صغیر احمد و دیگر کو نامزد کیا گیا ہے۔

صدر تھانے میں درج ہونے والے مقدمے میں لاؤڈ اسپیکر ایکٹ، دفعہ 144 کی خلاف ورزی اور ہنگامہ آرائی کی دفعات بھی شامل کی گئی ہیں۔

 

Read more »

مصطفیٰ کمال دیگر رہنماؤں سمیت رہا ,48 گھنٹوں میں اگلے لائحہ عمل کا اعلان کریں گے

کراچی : پاک سرزمین پارٹی کے چیئرمین مصطفی کمال کا کہنا ہے کہ ریلی کی تعداد سے حکمران خوفزدہ ہوگئے، پانی مانگنےوالوں پرآنسو گیس کے شیل برسائے گئے،مصطفی کمال جلد ہی آئندہ کے لائحہ عمل کا اعلان کریں گے۔

تفصیلات کے مطابق پی ایس پی کے سربراہ سید مصطفیٰ کمال سمیت دیگر رہنماؤں کو رہا کردیا گیا ، پولیس حراست سے رہائی کے بعد میڈیا سے گفتگو میں سید مصطفی کمال نے کارکنوں کو خراج تحسین پیش کیا، پاک سرزمین پارٹی کے سربراہ کا کہنا تھا کہ اپنے مطالبات سے کسی صورت دستبردار نہیں ہوں گے، آئندہ اڑتالیس گھنٹوں میں آئندہ کے لائحہ عمل کا اعلان کریں گے۔

مصطفٰی کمال کا کہنا تھا کہ جدوجہد کا دائرہ پورے صوبے تک پھیلے گا، پرامن کارکنوں پر تشدد کرکے حکمرانوں نے اپنے تابوت میں آخری کیل ٹھونک دی، اب احتجاج گلی گلی میں ہوگا۔

پی ایس پی سربراہ نے کہا کہ ریلی  کھڑی ہونے پر ہی حکمران لرز گئے، پانی مانگنےوالوں پرآنسوگیس کےشیل مارے جا رہے ہیں، خواتین کارکنان پر شیلنگ شرمناک  اقدام ہے، کراچی کے مظلوم عوام نے حکمرانوں کو ڈرا دیا ہے، صبر کا مظاہرہ کرنے پر کارکنان کو خراج تحسین پیش کرتا ہوں، لوگوں کی تعداد دیکھ کر حکمرانوں کی ٹانگیں کانپ گئیں، حکمرانوں کی ٹانگوں نےاب کانپنا ہے اور گر کر دفن ہونا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ امن میرےکارکنوں کاسب سےبڑاہتھیارہے، لاکھوں کی تعدادمیں عوام نےنکل کرثابت کیاوہ جاگ چکےہیں، حکمرانوں کےدن سندھ میں گنےجاچکےہیں، کسی کارکن کو گولی، کسی کو ڈنڈے مارے گئے،کیا یہ اسرائیل ہے؟ رات میں لوڈشیڈنگ سے بلکتے بچوں کی فریاد لے کر آئے تھے

Read more »

پولیس اور پی ایس پی میں تصادم , مرکزی قیادت گرفتار

کراچی: پی ایس پی کارکنان سے کشیدگی کے بعد پولیس نے مصطفیٰ کمال سمیت اور مرکزی قیادت سمیت سینکڑوں کارکنان کو گرفتار کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق شاہراہ فیصل پر واقع عائشہ باوانی  کے قریب انتظامیہ سے مذاکرات میں ناکامی کے بعد پاک سرزمین پارٹی کے کارکنان نے شاہراہ فیصل کے دسرے ٹریک کو بند کیا تو پولیس کی جانب سے لاٹھی چارج شروع کردیا گیا۔

لاٹھی چارج کے بعد مظاہرین اورپولیس میں کشیدگی شروع ہوئی جس کے بعد پولیس نے واٹر کینن کا استعمال کیا اور شیلنگ کی، جس کے نتیجے میں پی ایس پی کے رہنما انیس قائم خانی پوری طرح بھیگ گئے، پولیس نے کریک ڈاؤن کا آغاز کرتے ہوئے مصطفیٰ کمال سمیت پی ایس پی کی مرکزی قیادت کو حراست میں لے لیا۔ گرفتارشدگان میں ڈاکٹر صغیر،رضا ہارون اور دیگر شامل ہیں۔

گرفتاری کے بعد مصطفیٰ کمال نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے اپنی گرفتاری کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ پولیس نے معصوم بچوں اور خواتین پر شیلنگ کی، انتظامیہ نے یہ کام کر کے ہمارا کام بہت آسان کردیا، اب کراچی کے ہر علاقے میں مظاہرہ ہوگا۔ مصطفیٰ کمال نے کراچی کے عوام سے اپیل کی کہ وہ باہر نکلیں اور اپنے علاقوں میں مظاہرے شروع کریں

Read more »

ڈان لیکس سے متعلق رپورٹ جا ری ہونی چاہیے، مصطفیٰ کمال

کراچی : چیئرمین پاک سرزمین پارٹی مصطفیٰ کمال نے کہا ہے کہ ایم کیوایم کے ہوتے ہوئے شہر کراچی کا یہ حال ہوا ہے اور اگر معاملات حل نہ کئے تو کراچی رہنے کے قابل نہیں رہے گا۔

وہ جامعہ بنوریہ میں مفتی نعیم سے ملاقات کر رہے تھے اور انہوں نے کہا کہ جامعہ بنوریہ میں مفتی صاحب کو ملین مارچ کی دعوت دینے آئے ہیں کیوں کہ شہر کے حقوق کے لیے ہر ایک کو آواز دین گے۔

ہماری کسی سے لڑائی نہیں ہے ہمیں پتھرمارے گئے لیکن ہم نے کسی کوایک پتھرتک نہیں مارا اس لیے سب کوشہر کیلئے ملکر بیٹھنے کی دعوت دیتا ہوں کراچی کی بھلائی کے لئے جس کے ساتھ بیٹھنا ہوگا تیار ہیں۔

انہوں نے کہا کہ میری کسی سے لڑائی نہیں اور میں نے یہ جہاد اپنی مراعات کے لیے نہیں بلکہ شہر کے لئے شروع کیا ہے شادی یہی وجہ ہے کہ اللہ نے ہمیں کامیابی دی اور ہماری جدوجہد کے نتیجے میں دیگر جماعتیں بھی آج بات کررہی ہیں۔

مصطفیٰ کمال نے ایم کیو ایم پاکستان کو ہدف تنقید بناتے ہوئے کہا کہ ایم کیوایم کے ہوتے ہوئے شہر کا یہ حال ہوا ہے کراچی شہر کی روشنی کبھی ختم نہیں ہونے دیں گے
اس لیے آج یہاں آیا ہوں اور مفتی نعیم ان کے رفقا کواس جہاد میں شرکت کی دعوت دیتا ہوں۔

چیئرمین پاک سرزمین پارٹی نے کہا کہ ڈان لیکس کا معاملہ نہایت حساس ہے اور یہ حکومت کی ذمہ داری تھی اور ڈان لیکس سے متعلق رپورٹ جاری ہونی چاہئے تھی لیکن ابھی تو ڈان لیکس کا معاملہ ٹوئٹس پر دیکھ رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ کراچی کے لئے جو بھی آواز اٹھا رہا ہے میں اس کو سراہتا ہوں اور سراہتا رہوں گا اور اس سلسلے مین جس کسی سے بھی ہاتھ ملانا ہوگا میں آگے بڑھ کر گلے لگاوں گا۔

اس موقع پر مفتی نعیم کا مصطفیٰ کمال کے ملین مارچ کی حمایت کا اعلان کرتے ہوئے کہنا تھا کہ مصطفیٰ کمال اور فاروق ستار آپس میں اتفاق پیدا کریں اور شہر کراچی کے مسائل حل کے کیے مل کر کام کریں تا کہ عرصہ دراز سے حقوق سے محروم شہر کو حقوق میئسر آسکیں۔

Read more »

قومی پرچم کو سیاسی مقاصد کے لئے استعمال کرنے پر پابندی : الیکشن کمیشن

اسلام آباد(میڈیا رپورٹ) الیکشن کمیشن نے پاک سرزمین پارٹی کو قومی پرچم کو بطورسیاسی جھنڈا استعمال کرنے سے روک دیا ہے. کسی بھی سیاسی جماعت کو یہ حق حاصل نہیں ہے.

تفصیلات کے مطابق الیکشن کمیشن کا کہنا ہے کہ قومی پرچم کو پارٹی پرچم کے طور پراستعمال نہیں کیا جاسکتا ہے، قومی پرچم کا اپنا ایک تقدس ہوتا ہے، لہذا قومی پرچم کوجلسوں میں سیاسی مقاصد کے لیے استعمال نہ کیا جائے.

 متحدہ قومی موومنٹ سے علحیدگی کے بعد گذشتہ سال سابق مئیر کراچی مصطفی کمال نے 3 مارچ کی یادگاہ پریس کانفرنس کے بعد 23 مارچ کو اپنی سیاسی جماعت “پاک سرزمین پارٹی قومی” کا اعلان کیا تھا، پی ایس پی قومی پرچم کو سیاسی جھنڈے کے طور پر استعمال کرتی ہے.

 پاک سرزمین پارٹی کے نام اور قومی پرچم کو پارٹی پرچم کے طور پر استعمال کرنے کے خلاف صوبیدار (ر) ساجد کیانی نے درخواست دائر کی تھی، اس سلسلے میں الیکشن کمیشن نے 9 فروری کو فیصلہ محفوظ کیا تھا، الیکشن کمیشن نے پی ایس پی کا نام تبدیل کرنے کی درخواست مسترد کردی ہے۔

دوسری جانب پاک سرزمین پارٹی نے الیکشن کمیشن کےدائرہ سماعت کوچیلنج کرتے ہوئے کہا تھا کہ الیکشن کمیشن کے پاس یہ کیس سننے کا اختیار نہیں ہے اور ہماری پارٹی کا پرچم قومی پرچم سے منفرد ہے۔

 گذشتہ سال سابق مئیر کراچی نے جب اپنی سیاسی جماعت کا اعلان کیا توالیکشن کمیشن آف پاکستان نے پاک سرزمین پارٹی کی رجسٹریشن کے لئے درخواست نامکمل قراردیتے ہوئے مصطفیٰ کمال سے اثاثہ جات سمیت مزید تفصیلات طلب کی تھیں‌.

Read more »

Scroll Up